Tag Archives: کام

پنجاب کابینہ کی تعداد تاریخ کی ریکارڈ سطح پر پہنچ گئی ،جہازی سائز کی کابینہ کے باوجود کام کچھ نہیں ہو رہا ‘(ن)لیگ نے آئینہ دکھا دیا

لاہور( این این آئی)پنجاب کابینہ کی تعداد 46تک پہنچنے کے بعد تاریخ کی ریکارڈ سطح پر پہنچ گئی ۔رپورٹ کے مطابق ملک اسد کھوکھر کے بطور وزیر حلف اٹھانے کے بعد وزرا ء کی تعداد 36 ہوگئی ہے ۔ اس کے ساتھ کابینہ میں وزیر اعلیٰ کے پانچ خصوصی مشیر بھی شامل ہیں۔عون چوہدری کو ہٹائے جانے کے بعد آصف محمود کو مشیر تعینات کیا
گیا جبکہ ابھی وزیراعلیٰ کے ترجمان کی تعیناتی باقی ہے ۔ذرائع کے مطابق وزیر اعلی کے ترجمان بھی مشیر کے اختیارات استعمال کرتے ہیں۔مسلم لیگ (ن) پنجاب کی سیکرٹری اطلاعات عظمیٰ بخاری نے کہا کہ ہمارے

دور میں اڑتیس رکنی کابینہ پر اعتراض کیا جاتا تھا اور اب پنجاب میں جہازی سائز کی کابینہ ہے مگر کام کچھ نہیں ہو رہا ۔



پشاورمیں بی آر ٹی منصوبہ مکمل نہ ہوسکا لیکن پراجیکٹ پر کام کرنے والے کتنے ملازمین کو فارغ کردیا گیا؟وجہ جان کر آپ بھی سر پکڑ کر بیٹھ جائینگے

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)پی ڈی اے نے بی آر ٹی منصوبے کے 69 ملازمین کی ملازمتیں ختم کرکے ان کو فارغ کردیا۔پشاور ڈویلپمنٹ اتھارٹی کی جانب سے جاری اعلامیہ کے مطابق بی آر ٹی منصوبے کے 69 ملازمین کو فارغ کردیا گیا ہے، ان کی ملازمتیں اوور ہیڈ چارجر
کی مد میں فنڈز ختم ہونے کے بعد ختم کی گئی ہیں۔اعلامیہ کے مطابق فارغ ہونے والے ملازمین میں سپر وائزر، اسسٹنٹ سپروائزرز ، ڈرائیورز ، مالی اور چوکیدار شامل ہیں۔واضح رہے کہ یہ منصوبہ سابق وزیر اعلیٰ پرویز خٹک کے آخری دور میں شروع کیا گیا تھا لیکن تاحال مکمل نہ



اب ملک بھر کے تمام ایئرپورٹس پر کوئی بھی یہ کام نہیں کرسکے گا،سول ایوی ایشن نے عوام پر نئی پابندیاں عائد کردیں،نوٹیفیکیشن جاری

راولپنڈی(این این آئی) اب ملک بھر کے تمام ایئرپورٹس پر کوئی بھی یہ کام نہیں کرسکے گا،سول ایوی ایشن نے عوام پر نئی پابندیاں عائد کردیں،نوٹیفیکیشن جاری،تفصیلات کے مطابق موبائل فون سے خوفزدہ پنجاب پولیس کے ساتھ سول ایوی ایشن بھی موبائل فون سے خوفزدہ نظر آنے لگی،ملکی ایئرپورٹس کے ایپرن، اور لاؤنج میں موبائل فون کے ا ستعمال پر پابندی عائد کر دی۔ جمعہ کو سول ایوی ایشن اتھارٹی نے باقاعدہ نوٹیفکیشن جاری کردیا
جس کے مطابق ممنوعہ جگہوں پر موبائل فون کے استعمال کرنے والوں کیخلاف کارروائی کی جائے گی  اور اس سلسلے میں تمام ایئرپورٹس منیجر کو پابندی

بارے ہدایات جاری کردیں گئیں،دریں اثناء  اندرون وبیرون ملک سے آنے اورجانے والی 14منسوخ جبکہ 6پروازیں تاخیر کاشکارہوئیں جس سے شہریوں کو شدید مشکلات کاسامنا کرنا پڑا۔ تاخیر کاشکارہونے والی پروازوں میں پی آئی اے کی لندن سے آنے وجانے والی دوطرفہ پرواز 757اور758،چائنہ ائر کی گوانگزو کی دوطرفہ پرواز 6037/6038،سرین ائر کی کراچی انے وجانے والی دوطرفہ پرواز 523/522،پی آئی اے کی دہلی کی دوطرفہ پرواز 270/271،پی آئی اے کی ملتان کی دوطرفہ پرواز 683/684،پی آئی اے کی اسلام آباد کی دوطرفہ پرواز 653/654،ائر بلیو کی جدہ سے جانے والی پرواز 470اورپی آئی اے کی کراچی جانے والی پرواز 307شامل جبکہ متعدد پروازیں تاخیر کاشکارہوئیں۔ علاوہ ازیں ریلوے حکام ٹرین شیڈول بحال کرنے میں ناکام ہو گئے۔کراچی اور کوئٹہ سے لاہور آنے اور لاہور سے جانے والی متعد د ٹرینیں گھنٹوں تاخیر کا شکار ہوئیں۔شاہ حسین ایکسپریس 4 گھنٹے،خیبر میل 3 گھنٹے، پاک بزنس ایکسپریس 3گھنٹے، قراقرم ایکسپریس 3 گھنٹے، گرین لائن 1 گھنٹہ،تیز گام 1 گھنٹہ، علامہ اقبال ایکسپریس ڈیڑھ گھنٹہ، کراچی ایکسپریس 2 گھنٹے،اکبر ایکسپریس 1 گھنٹہ20، شالیمار ایکسپریس ڈیڑھ1 گھنٹہ، پاکستان ایکسپریس 3 گھنٹے، ملت ایکسپریس 2 گھنٹے،جعفر ایکسپریس 2 گھنٹے اورفرید ایکسپریس 1 گھنٹہ تاخیر کاشکار ہوئی۔ ٹرینیں لیٹ ہونے سے مسافروں کو شدید پریشانی کا سامناکرنا پڑا۔



27ستمبر کے بعدیہ کام کرنے والا ہوں،شیخ رشید کے اعلان نے مقبوضہ کشمیر کے عوام میں نیا جوش پیدا کردیا

مظفر آباد (این این آئی) وفاقی زیر وزیر ریلوے شیخ رشید احمد نے کہا ہے کہ بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کو جواب دینے کا وقت آ گیا ہے،پاکستان اور بھارت کے درمیان سب سے بڑا مسئلہ کشمیر کا ہے، پاکستانی معیشت کمزور ہوسکتی ہے دفاع کمزور نہیں ، مودی پھنس گیا ہے اسے جانے نہیں دینگے ۔
27 ستمبر کے بعد مقبوضہ کشمیریوں کو کال دوں گا،سمجھوتہ اور تھر ایکسپریس بند کر دیں، ننکانہ صاحب کے لیے ٹرین چلاؤں گا،اپوزیشن مسئلہ کشمیر کو سیاست سے بالا تر رکھے۔ جمعہ کو یہاں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے انہوںنے کہاکہ پاکستان اور

بھارت کے درمیان سب سے بڑا مسئلہ کشمیر کا ہے۔انہوںنے کہاکہ مودی کی عقل جواب دے چکی ہے، مقبوضہ وادی میں حریت رہنماؤں کو گرفتار کیاجا رہا ہے۔وفاقی وزیر نے کہا کہ پاکستان کی معیشت کمزور ہو سکتی ہے، دفاع کمزور نہیں ہے، مودی کو جواب دینے کا وقت آگیا ہے، مودی پھنس گیا ہے اسے جانے نہیں دیں گے۔انہوں نے کہاکہ کوئی ملک جنگ نہیں چاہتا لیکن مودی نے مکمل منصوبہ بندی کے ساتھ آرٹیکل 370 کو ختم کیا۔انہوں نے بتایا کہ27 ستمبر کو جنرل اسمبلی کے اجلاس میں وزیراعظم عمران خان دنیا کو واضح پیغام دیں گے۔شیخ رشید نے کہا کہ مودی فاشسٹ نے 303 سیٹوں میں سے کسی مسلمان کا نام نہیں دیا، مودی سرکار نے آسام میں 20 لاکھ مسلمانوں کو دوسرے درجے کا شہری بنا دیا ہے، مودی نے اسلام اور مسلمانوں کیخلاف اعلان جنگ کیا ہے۔انہوں نے 22 ستمبر کو ایل او سی کے سماہنی سیکٹر کے دورے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ 27 ستمبر کے بعد مقبوضہ کشمیریوں کو کال دوں گا۔انہوں نے کہاکہ سمجھوتہ اور تھر ایکسپریس بند کر دیں، ننکانہ صاحب کے لیے ٹرین چلاؤں گا،شیخ رشید نے کہا کہ اپوزیشن سے درخواست ہے کہ مسئلہ کشمیر کو سیاست سے بالا تر رکھے، سب کشمیر کے لیے ایک ہو جاؤ، باقی نیب کو اپنا کام کرنے دو۔



مولانا فضل الرحمن 50سے 60بندے کس لئے مروائیں گے؟ کارکنوں کو کس کام کیلئے تیار کیا جارہاہے؟امیر جے یو آئی نے خطرناک منصوبہ بنا لیا

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) نجی ٹی وی پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے معروف صحافی عارف حمید بھٹی کا کہنا تھا کہ احتجاج جمہوریت کا حسن ہے۔لیکن بے مقصد فراڈ جمہوریت کا حسن نہیں ہے۔لوگوں کے حقوق پر ڈاکہ مارنا جمہوریت نہیں۔بے شک احتجاج کرنا مولانا فضل الرحمن کا حق بنتا ہے۔
لیکن مولانا فضل الرحمن یہ بتائیں کہ آپ جتنی دیر اقتدار میں رہے اس قوم کے لیے کیا کیا؟کیا وجوہات ہیں کہ پاکستان پیپلز پارٹی اور پاکستان مسلم لیگ دونوں کے لیڈر جیل کے اندر ہیں لیکن پھر بھی انہوں نے آپ کا ساتھ دینے سے انکار کردیا۔کے پی کے میں

لوگوں کو روزگار نہیں ملا۔ان کے پاس سڑکیں نہیں، علاج کرنے کے لیے ہسپتال نہیں ۔ وزیراعظم کو ہٹانا ہے تو آئینی طریقے سے ہٹائیں۔مولانا فضل الرحمن جس کشمیر کمیٹی کے رکن رہے اس کے لیے آپکی زبان کبھی نہیں کھلی۔کشمیریوں پر ہونے والے مظالم پر کچھ نہیں کہا۔کاش ووٹ کو عزت دینے والے واقعی ووٹ کو عزت دیتے،انہوں نے کہا کہ مولانا فضل الرحمان بتائیں کہ 50 سے 60 بندے کس لیے مروائیں گے؟۔یاد رہے کہ پہلے بھی یہ خبر سامنے آئی تھی کہ مولانا فضل الرحمن اپنے کارکنان کو فوج کے خلاف تیار کر رہے ہیں اور اس کی وجہ یہ ہے کہ مولانا فضل الرحمن جانتے ہیں کہ جب وہ اسلام آباد کی طرف آئیں گے تو اہم تنصیبات، اہم اداروں اور اہم مقامات کی سکیورٹی فوج کے پاس ہو گی۔اس لیےمولانا فضل الرحمن اپنے کارکنان کو ذہنی طور پر تیار کر کے لا رہے ہیں کہ اگر فوج ڈیوٹی پر ہو تو یہ پاک فوج کے جوانوں سے بھی لڑ جائیں اور ان جوانوں پر بھی حملہ آور ہوں اور یہ انتہائی خطرناک چیز ہے۔ مولانا فضل الرحمن ان کارکنان کی برین واشنگ کر رہے ہیں۔



قومی اسمبلی سیکرٹریٹ کاشاہد خاقان عباسی  کوخط کا جواب،مطمئن نہیں تو کیا کام کریں؟مشورہ بھی دے دیا

اسلام آباد(آن لائن)قومی اسمبلی سیکرٹریٹ نے رکن اسمبلی شاہد خاقان عباسی کو خط کاجواب دیدیا، جوابی خط سپیکر اسمبلی اسد قیصرکی ہدایت پر لکھا گیا۔قومی اسمبلی سیکرٹریٹ کی جانب سے لکھے گئے جوابی خط کے متن کے مطابق پروڈکشن آرڈرز کے معاملے پر اسپیکر غیر جانبدارانہ سوچ سے فیصلہ کرتے ہیں،اسپیکر بحیثیت قومی اسمبلی کے کسٹودین اراکین کے حقوق کا تحفظ کرنے کے حوالے سے اپنی ذمہ داریوں سے بخوبی آگاہ ہیں اور اسپیکر زیر حراست رکن کے خلاف درج شدہ کیس کی
نوعیت کا بغور جائزہ لیتے ہیں  جبکہ پروڈکشن آرڈر کا اجراء اسپیکر کا صوابدیدی اختیار ہے رکن اس

کا مطالبہ نہیں کر سکتا۔خط میں مزید کہا گیا ہے کہ اسمبلی کے قواعد وضوابط کے مطابق اسپیکر ضروری سمجھنے پر زیر حراست رکن کو اجلاس میں شرکت کے لیے طلب کر سکتا ہے۔پروڈکشن آرڈر کے اجراء سے متعلق آئینی گنجائش موجود نہیں۔اگر زیر حراست رکن اسپیکر کی جانب سے پروڈکشن آرڈرز کے اجراء  پر مطمئن نہیں تو اس سلسلہ میں عدالت سے رابطہ کرسکتا ہے۔



 آرمی چیف سے امریکی سینٹ کام کے کمانڈر جنرل کینتھ مکنیری کی ملاقات، کشمیر اور افغاستان کی صورتحال پر تبادلہ خیال

راولپنڈی (این این آئی)آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے امریکی سینٹ کام کے کمانڈر، جنرل کنیتھ مکینری نے ملاقات کی جس میں خطے کی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کی جانب سے جاری بیان کے مطابق آرمی چیف سے
کمانڈر سینٹ کام جنرل کنیتھ مکینزی کی قیادت مِیں امریکی وفد نے جی ایچ کیو میں ملاقات کی۔آئی ایس پی آر کے مطابق ملاقات میں جیو اسٹریٹیجک اورعلاقائی سیکیورٹی کی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا، کشمیر اور افغانستان کی صورتحال پر بھی بات چیت کی



کرپٹ سیاست دانوں نے پیسے واپس کرنے شروع کر دیئے آصف زرداری اور نواز شریف کس کام میں لگ گئے ؟ حیران کن دعویٰ

سکھر(آن لائن)وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید احمد نے کہا ہے کہ بدعنوان سیاستدانوں نے پیسے واپس کرنے شروع کر دیے ہیں، آصف زرداری کے دوستوں نے پلی بارگین کی کوششیں شروع کر دی ہیں جبکہ نواز شریف کا بھی یہی ارادہ ہے۔میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ
اگر پاک بھارت جنگ ہوئی دنیا کی سائنسدان انگشت بدنداں ہو جائیں گے۔انہوں نے کہا کہ مودی نے جو حرکت کی ہے اس پر ہمارے پاس جنگ کے سوا دوسرا راستہ نہیں لیکن ہم پھر بھی مذاکرات کے ذریعے معاملات حل کرنا چاہتے ہیں کیونکہ دوسری صورت میں پورا خطہ تباہی

کی لپیٹ میں آ جائے گا۔وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ مودی نے جو غلطی کی ہے وہ آخری جنگ ہو گی، میں نے پاؤ، آدھا پاؤ والی بات بالکل کی ہے۔انہوں نے کہا کہ عمران خان کی قیادت میں پاکستان کی قسمت بدلے گی، دس ہزار نوکریاں دے دی ہیں، کابینہ نے دس ہزار مزید نوکریوں کی منظوری دے دی ہے، ایک لاکھ لوگوں کو روزگار فراہم کرنے کا ارادہ ہے۔انہوں نے کہا کہ کوریا میں بھی ایک صدر جیل میں ہے دوسراقتل ہو گیا ہے، جو بے ایمان ہو گا، دھوکا دے گا، عوام اور میڈیا اسے نہیں چھوڑیں گے.



”اب نعروں کا نہیں عمل کا وقت ہے“ ہم کون سا کام کرکے ”مقبوضہ کشمیر“ آزاد کروائیں گے؟ کیپٹن (ر) صفدر نے حیرت انگیز اعلان کر دیا

لاہور(این این آئی) مسلم لیگ (ن) کے مرکزی رہنما کیپٹن (ر) صفدر نے کہا ہے کہ ملکی سیاسی صورتحال اچھی نہیں، ڈیل کی باتیں سوائے افواہ کے کچھ نہیں،ملک میں نئے انتخابات سے منتخب حکومت آئے گی تو معاملہ حل ہو گا۔مسلم لیگ (ن) کا ووٹ کو عزت دو کا نظریہ ہی چلے گا۔ ان خیالات کااظہارانہوں نے کوٹ لکھپت جیل کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔
کیپٹن (ر) صفدر نے کہاکہ میاں صاحب بالکل ٹھیک ہیں اورانہوں نے کہاہے کہ کوئی ڈیل نہیں ہو گی،72 سالوں سے ڈیل نے ملک کا یہ حال کیا ہے۔نواز شریف نے کہا

ہے کہ اب فیصلہ کن گھڑی کا وقت ہے،22 کروڑ عوام ایل او سی کراس کر کے کشمیر کا فیصلہ کرے گی۔کشمیر نعروں،باتوں،قراردادوں اور کھمبوں پر پوسٹرز لگانے سے آزاد نہیں ہوگا،انہوں نے کہاکہ ملکی سیاسی صورتحال اچھی نہیں،ملک میں نئے انتخابات سے منتخب حکومت آئے گی تو معاملہ حل ہو گا۔کسی حکومت نے آج تک کرپشن ختم کرنے کے اقدامات نہیں کئے۔حکومت کو پتہ چل گیا ہے کہ نواز شریف کو جیل میں رکھنے کا کیا نقصان ہوا ہے۔نواز شریف اپوزیشن لیڈر ہی ہوتے تو بھارت کو کشمیر پر قبضے کی جرات نہ ہوتی۔انہوں نے کہاکہ ملکی سیاسی صورتحال اچھی نہیں، ڈیل کی باتیں سوائے افواہ کے کچھ نہیں۔نوازشریف کے حوصلے بلند ہیں،کوئی ڈیل نہیں ہو رہی ہے۔ ملک کا مستقبل جیل میں بیٹھے شخص سے جڑا ہے۔پاکستان مسلم لیگ (ن) کا وہی نظریہ چلے گا جو نواز شریف کا نظریہ ہے۔ایک ہی شخص ہے جو ابھی تک مردانہ وار لڑ رہا ہے جو کہ کوٹ لکھپت جیل میں بیٹھا ہے۔انہوں نے کہاکہ ووٹ کو عزت دو کا نظریہ ہی چلے گا۔کربلا کے حالات دیکھوں تو مریم نواز کو جن حالات میں رکھا گیا ہے اس سے کوئی فرق نہیں پڑ تا۔میڈیا آزاد نہیں ہے، میڈیا کے کارکنوں کیلئے فکر مند ہوں۔



اپوزیشن والے ذہنی طور پر اپنے اپنے ابو کو نکالنے کے چکر میں پھنسے ہوئے ہیں، نواز شریف اور آصف زرداری نکلنا چاہتے ہیں تو پھر یہ کام کریں، بہترین مشورہ دیدیا گیا

اسلام آباد (آن لائن)وفاقی وزیر برائے سائنس و ٹیکنالوجی فوادچودھری نے کہاہے کہ اپوزیشن کامسئلہ یہ ہے کہ وہ ذہنی طور پراپنے اپنے ابو کو نکالنے کے چکرمیں پھنسے ہوئے ہیں۔ نواز شریف اورآصف زرداری پیسے بھی نہ دیں، سیاست بھی بچ جائے اورچلے بھی جائیں توایسا تو نہیں ہوسکتا۔نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے فواد چودھری نے کہا کہ وزیر اعظم کی کشمیر پر حکمت عملی کافی اچھی رہی ہے،
پہلی مرتبہ سلامتی کونسل میں مسئلہ کشمیر پر بحث کی گئی ہے، ٹرمپ نے کہا کہ کشمیرپر ثالثی کریں گے لیکن ملکوں کی ایک حد ہے، وہ مود ی

سے کہہ رہے ہیں کہ کشمیر سے کرفیو ختم کریں۔ انہوں نے کہا کہ ہٹلر سے ساری دنیا کہہ رہی تھی کہ جو آپ کررہے ہیں یہ ٹھیک نہیں ہے اور اس کی قیمت ہٹلر کو بعد میں ادا کرنا پڑی۔انہوں نے کہا کہ اپوزیشن کے پاس بھی کوئی حکمت عملی نہیں ہے، وہ بس آکر بات ہی کردیتے ہیں کہ یہ کرنا چاہئے، وہ کرنا چاہئے۔ فواد چودھری کا کہناتھا کہ عالمی میڈیا میں مسئلہ کشمیر کو اتنی کوریج کہاں ملی تھی؟ اس میں بھی زیادہ حصہ مودی کا ہے۔انہوں نے کہا کہ اپوزیشن کامسئلہ یہ ہے کہ وہ ذہنی طور پراپنے اپنے ابو کو نکالنے کے چکرمیں پھنسے ہوئے ہیں۔ان کے تمام احتجاج اور جلسے احتساب کے پر رہتے ہیں، مسئلہ اس وقت یہ ہے کہ اپوزیشن کابیانیہ یہ ہے کہ نواز شریف اور آصف زرداری کوچھوڑ دیا جائے تو عام آدمی کواس کے ساتھ کوئی ہمدردی نہیں ہے۔ نواز شریف اورآصف زرداری نکلنا چاہتے ہیں تو پلی بارگین کریں اورا س کے بعد لندن جائیں جہاں مرضی جائیں۔ انہوں نے کہا کہ یہ کہتے ہیں پیسے بھی نہ دیں، سیاست بھی بچ جائے اورچلے بھی جائیں توایسا تو نہیں ہوسکتا۔انہوں نے کہا کہ عمران خان اگر ان کوسزانہیں دلواتے اور مشرف کی طرح ڈیل کرلیتے ہیں تو پھر تحریک انصاف کو سیاسی طور پربڑا نقصان پہنچے گا، اس لئے عمران خان یہ کام نہیں کریں گے۔